خلاصہ القرآن : 19 انیسواں پارہ​

خلاصہ القرآن
Spread the love

الحمد اللہ آج خلاصہ القرآن کا انیسواں پارہ​​ مکمل ہوا۔

خلاصہ القرآن مکمل پڑھیں

اس پارے میں تین حصے ہیں:

سورۂ فرقان (بقیہ حصہ)

سورۂ شعراء (مکمل)

سورۂ نمل (ابتدائی حصہ)

سورۂ فرقان کے بقیہ حصے میں چار باتیں یہ ہیں:

  1. قیامت
  2. توحید (آسمان ، زمین اور رات دن کا خالق ﷲ ہی ہے۔)
  3. رسالت (نبی کو بشیر و نذیر بنا کر بھیجا گیا ہے۔)
  4. عباد الرحمٰن کی صفات (عاجزی سے چلنا ، جاہلوں سے اعراض ، راتوں کو عبادت ، جہنم کے عذاب سے پناہ مانگنا ، خرچ کرنے میں اعتدال ، نہ فضول خرچی نہ بخل ، شرک سے اجتناب ، قتل ناحق سے بچنا ، زنا اور بدکاری سے پرہیز ، جھوٹی گواہی سے احتراز ، بری مجالس سے پہلوتہی ، کتاب ﷲ سے متاثر ہونا ، نیک بیوی بچوں کی دعا اور یہ دعا کہ ہمیں ہادی اور مہتدی بنا)

سورۂ شعراء میں تین باتیں یہ ہیں:

  1. سات انبیائے کرام کے قصے (حضرت موسیٰ علیہ السلام ، حضرت ابراہیم علیہ السلام ، حضرت نوح علیہ السلام ، حضرت ہود علیہ السلام ، حضرت صالح علیہ السلام ، حضرت لوط علیہ السلام ، حضرت شعیب علیہ السلام)
  2. قرآن کی حقانیت: (اسے رب العالمین نے اتارا ہے ، روح امین حضرت جبرائیل علیہ السلام کے واسطے سے ، نبی صلی ﷲ علیہ وسلم کے قلب پر ، لوگوں کو ڈرانے اور متنبہ کرنے کے لیے ، واضح عربی زبان میں۔)
  3. شعراء کی مذمت کہ ان کے پیچھے تو بے راہ لوگ چلتے ہیں ، یہ ہر وادی میں بھٹکتے پھرتے ہیں ،ایسی باتیں کہتے ہیں جو کرتے نہیں ہیں ، البتہ وہ لوگ مستثنی ہیں جو ایمان لائے اور نیک اعمال اختیار کیے اور ﷲ کو کثرت سے یاد کیا۔

سورۂ نمل کے ابتدائی حصے میں دو باتیں یہ ہیں:​

  1. قرآن کی عظمت
  2. پانچ انبیائے کرام کا ذکر: (حضرت موسیٰ علیہ السلام ، حضرت داؤد علیہ السلام ، حضرت سلیمان علیہ السلام ، حضرت صالح علیہ السلام ، حضرت لوط علیہ السلام۔ بالخصوص واقعۂ نمل ، واقعۂ ہدہد اور واقعۂ ملکہ سبا)

خلاصہ القرآن مکمل پڑھیں

اسلام کے بارے میں پڑھیں

خلاصہ القرآن:  حضرت مولانا محمد اسلم شیخوپوری شہید رحمۃاللہ علیہ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *