پانی کی کمی: ہرٹ اٹیک کی 1 بڑی وجہ

پانی کی کمی :ہرٹ اٹیک کا سبب
Spread the love

پانی کی کمی

پانی
کی کمی
دل کی تیز دھڑکنوں
کا سبب بن سکتی ہے۔…!
عام طور پر
دل کی دھڑکن ایک منٹ میں
ستر بہتر تک ہوتی ہے
لیکن اگر یہ بڑھ جائے
مثلاً
نوے سے سو تک ہو جائے تو
اس کی ایک وجہ جسم میں پانی کی
کمی بھی ہوسکتی ہے

پانی کی کمی کے نقصانات

خون میں بڑی مقدار میں پانی موجود ہے ،
لہذا جب پانی کی کمی کا شکار ہوجائیں
تو خون گاڑھا ہوسکتا ہے۔
خون جتنا گاڑھا ہوتا ہے ،
اس کو رگوں میں منتقل کرنے کے لئیے
دل کو اتنا ہی زیادہ کام کرنا پڑتا ہے۔
اس سے نبض کی شرح میں اضافہ ہوسکتا ہے
اور ممکنہ طور پر دھڑکن تیز ہوجاتی ہیں

روزانی کتنا پانی پینا چاہیے

جب بھی بغیر زیادہ بھاگ دوڑ
یا مشقت کے تھوڑا سا کام کرنے سے
دل کی دھڑکن بڑھ جائے تو
سب سے پہلے
چیک کیجئے آپ
کتنا پانی پی رہے ہیں
عام طور پر
ایک مرد کو تین سے ساڑھے تین لیٹر
پانی پینا چاہیے
اور
خاتون کو ڈھائی لیٹر کم از کم
بہتر ہے
صبح دو گلاس پانی پی لیں
جس کی وجہ سے پیٹ کا نظام ٹھیک کام کرے گا

پانی کب اور کیسے پیئیں

ایک گلاس نہانے سے پہلے
ایک ایک گلاس ہر کھانے سے پہلے
اور ایک گلاس سونے سے پہلے
یہ مقدار اور ترتیب تو لازمی سمجھیں
لیکن اصل مقدار ڈھائی سے ساڑھے تین لیٹر
کسی بھی شکل میں یعنی چائے، قہوہ، جوس، دودھ ،
سب ملا کر مکمل کر لیں

جاوید اختر آرائیں
٣ اپریل ٢٠٢٠
#جاوید_اختر_آرائیں

صحت مند رہنے کے لیے مزید پڑھیں

How Much Water Should You Drink Every Day?

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *